Uss Ko Pane Ki Tamana Main Tarapta Mujh Main

اُس کو پانے کی تمنا میں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔ تڑپتا، مجھ میں

اُس کو پانے کی تمنا میں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔ تڑپتا، مجھ میں

کوئی بچہ ہے ، جو رہتا ہے ہُمکتا ، مجھے میں

شام ہوتے ہی ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ اِسے دشت کی یاد آتی ہے

کوئی دیوانہ ہے ، وحشی ہے ، بھٹکتا مجھ میں

ہجر کا نخل ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ثمر بار شجر ہونے لگا

شاخِ غم سے ، ہے کوئی بور سا جھڑتا مجھ میں

سُلگی رہتی ہے ۔۔۔۔۔۔۔۔۔ تری یاد کی چنگاری سی

ایک شعلہ سا ۔۔۔۔ ہے رہ رہ کے بھڑکتا مجھ میں

تیری باتوں کی مہک جب بھی سماعت میں گھلے

دھیرے دھیرے ، کوئی غنچہ ہے چٹکتا مجھ میں

جب بھی یاد آئے وہ حیرت سے بھری آنکھ تری

گلِ نرگس ہے ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ بہت دیر مہکتا مجھ میں

یونہی دل میں رہے نسرینؔ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ وہ آئینہ مثال

اور مرا عکس رہے ۔۔۔۔۔۔ یونہی سنورتا مجھ میں

نسرین سید

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(516) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Nasreen Syed, Uss Ko Pane Ki Tamana Main Tarapta Mujh Main in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 54 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Nasreen Syed.