Din Saliqay Se Uga Raat Thikane Se Rahi

دن سلیقے سے اگا رات ٹھکانے سے رہی

دن سلیقے سے اگا رات ٹھکانے سے رہی

دوستی اپنی بھی کچھ روز زمانے سے رہی

چند لمحوں کو ہی بنتی ہیں مصور آنکھیں

زندگی روز تو تصویر بنانے سے رہی

اس اندھیرے میں تو ٹھوکر ہی اجالا دے گی

رات جنگل میں کوئی شمع جلانے سے رہی

فاصلہ چاند بنا دیتا ہے ہر پتھر کو

دور کی روشنی نزدیک تو آنے سے رہی

شہر میں سب کو کہاں ملتی ہے رونے کی جگہ

اپنی عزت بھی یہاں ہنسنے ہنسانے سے رہی

ندا فاضلی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(501) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Nida Fazli, Din Saliqay Se Uga Raat Thikane Se Rahi in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love Urdu Poetry. Also there are 158 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Love poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Nida Fazli.