Aik Manzar

ایک منظر

تیری یادوں کا سُورج

برف پِگھلاتا ھؤا برفیلے لہجوں کی

ھوائیں عنبریں زُِلفوں کی تیری

موسموں کی سبز دیوِی کے بدن پر

گُدگُدی کرتی ھوئی محسُوس ھوتی ہیں

صحِیفے کُچھ تِرے لب سے

مِرے دِل کے درِیچے پر

بہت دِھیمی سی دستک سے

نِہایت رنگ بِکھراتی  دھنک آنکھیں

مدُھر سنگِیت سی، خاموش منظر میں

کسی جادوئی نگری میں،

کسی جھرنے سے گِرتے پانیوں سی

کِسی ناری کے پاؤں میں بندھی پازیب سی

آواز کی بنسی، تِرے ھونٹوں پہ بجتی ھے

تبسُّم کی مِرے ھونٹوں پہ

 مُرجھائی ھوئی کلیاں ہیں نذرانہ

پروفیسر رشید حسرت

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(376) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Professor Rasheed Hasrat, Aik Manzar in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 82 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Professor Rasheed Hasrat.