Woh Rawayya Kabhi Tabdeel Nahi Karte Kya, Urdu Ghazal By Professor Rasheed Hasrat

Woh Rawayya Kabhi Tabdeel Nahi Karte Kya is a famous Urdu Ghazal written by a famous poet, Professor Rasheed Hasrat. Woh Rawayya Kabhi Tabdeel Nahi Karte Kya comes under the Sad category of Urdu Ghazal. You can read Woh Rawayya Kabhi Tabdeel Nahi Karte Kya on this page of UrduPoint.

وہ رویّہ کبھی تبدیل نہیں کرتے کیا

پروفیسر رشید حسرت

وہ رویّہ کبھی تبدیل نہیں کرتے کیا

اپنی آنکھوں کو ابھی جھیل نہیں کرتے کیا

یہ الگ بات کہ خود اپنا گرایا ہے وقار

واسطے بھیلنی کے بِھیل نہیں کرتے کیا

زُعم تھا، جس نے رکھا تجھ کو اناؤں کا شکار

ہم ترے حکم کی تعمیل نہیں کرتے کیا

سب نے خود سے یہی سمجھا کہ فلسطین میں ہیں

اب مدد آ کے ابابیل نہیں کرتے کیا

سارا کچھ اپنا تو لوٹا ہے گگن نے یارو

اِس کا کوڑوں سے بدن نیل نہیں کرتے کیا

کرتے رہتے ہیں کثافت میں "وہ" کردار ادا

"ہم" فضا میں بھلا تحلیل نہیں کرتے کیا

عین موقع پہ مرا جھوٹ جو پکڑا ہے رشیدؔ

پھر تحفظ کو بھی تاویل نہیں کرتے کیا

پروفیسر رشید حسرت

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1497) ووٹ وصول ہوئے

You can read Woh Rawayya Kabhi Tabdeel Nahi Karte Kya written by Professor Rasheed Hasrat at UrduPoint. Woh Rawayya Kabhi Tabdeel Nahi Karte Kya is one of the masterpieces written by Professor Rasheed Hasrat. You can also find the complete poetry collection of Professor Rasheed Hasrat by clicking on the button 'Read Complete Poetry Collection of Professor Rasheed Hasrat' above.

Woh Rawayya Kabhi Tabdeel Nahi Karte Kya is a widely read Urdu Ghazal. If you like Woh Rawayya Kabhi Tabdeel Nahi Karte Kya, you will also like to read other famous Urdu Ghazal.

You can also read Sad Poetry, If you want to read more poems. We hope you will like the vast collection of poetry at UrduPoint; remember to share it with others.