Awwal Tu Teray Koochay MeiN Aata NahiN Milta

اول تو ترے کوچے میں آنا نہیں ملتا

اول تو ترے کوچے میں آنا نہیں ملتا

آؤں تو کہیں تیرا ٹھکانا نہیں ملتا

ملنا جو مرا چھوڑ دیا تو نے تو مجھ سے

خاطر سے تری سارا زمانا نہیں ملتا

آوے تو بہانے سے چلا شب مرے گھر کو

ایسا کوئی کیا تجھ کو بہانا نہیں ملتا

کیا فائدہ گر حرص کرے زر کی تو ناداں

کچھ حرص سے قاروں کا خزانا نہیں ملتا

بھولے سے بھی اس نے نہ کہا یوں مرے حق میں

کیا ہو گیا جو اب وہ دوانا نہیں ملتا

پھر بیٹھنے کا مجھ کو مزہ ہی نہیں اٹھتا

جب تک کہ ترے شانے سے شانا نہیں ملتا

اے مصحفیؔ استاد فن ریختہ گوئی

تجھ سا کوئی عالم کو میں چھانا نہیں ملتا

غلام ہمدانی مصحفی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(720) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ghulam Hamdani Mushafi, Awwal Tu Teray Koochay MeiN Aata NahiN Milta in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad, Social Urdu Poetry. Also there are 51 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Sad, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ghulam Hamdani Mushafi.