Hawa Ke Saing Na Pakro Khader Deti Hai

ہوا کے سینگ نہ پکڑو کھدیڑ دیتی ہے

ہوا کے سینگ نہ پکڑو کھدیڑ دیتی ہے

زمیں سے پیڑوں کے ٹانکے ادھیڑ دیتی ہے

میں چپ کراتا ہوں ہر شب امڈتی بارش کو

مگر یہ روز گئی بات چھیڑ دیتی ہے

زمیں سا دوسرا کوئی سخی کہاں ہوگا

ذرا سا بیج اٹھا لے تو پیڑ دیتی ہے

رندھے گلے کی دعاؤں سے بھی نہیں کھلتا

در حیات جسے موت بھیڑ دیتی ہے

گلزار

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1785) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Gulzar, Hawa Ke Saing Na Pakro Khader Deti Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad, Social Urdu Poetry. Also there are 107 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the Sad, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Gulzar.