Hum To Kitno Ko Meh Jabain Kehte

ہم تو کتنوں کو مہ جبیں کہتے

ہم تو کتنوں کو مہ جبیں کہتے

آپ ہیں اس لیے نہیں کہتے

چاند ہوتا نہ آسماں پہ اگر

ہم کسے آپ سا حسیں کہتے

آپ کے پاؤں پھر کہاں پڑتے

ہم زمیں کو اگر زمیں کہتے

آپ نے اوروں سے کہا سب کچھ

ہم سے بھی کچھ کبھی کہیں کہتے

آپ کے بعد آپ ہی کہیے

وقت کو کیسے ہم نشیں کہتے

وہ بھی واحد ہے میں بھی واحد ہوں

کس سبب سے ہم آفریں کہتے

گلزار

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(2033) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Gulzar, Hum To Kitno Ko Meh Jabain Kehte in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 107 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Gulzar.