Mujh Ko Bhi Tarkeeb Sikha Koi Yaar Jalahay

مجھ کو بھی ترکیب سکھا کوئی یار جلاہے

مجھ کو بھی ترکیب سکھا کوئی یار جلاہے

اکثر تجھ کو دیکھا ہے کہ تانا بنتے

جب کوئی تاگا ٹوٹ گیا یا ختم ہوا

پھر سے باندھ کے

اور سرا کوئی جوڑ کے اس میں

آگے بننے لگتے ہو

تیرے اس تانے میں لیکن

اک بھی گانٹھ گرہ بنتر کی

دیکھ نہیں سکتا ہے کوئی

میں نے تو اک بار بنا تھا ایک ہی رشتہ

لیکن اس کی ساری گرہیں

صاف نظر آتی ہیں میرے یار جلاہے!

گلزار

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(3148) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Gulzar, Mujh Ko Bhi Tarkeeb Sikha Koi Yaar Jalahay in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 107 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.1 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Gulzar.