Marwaye Jahan Se Aye Hain

ماورائے جہاں سے آئے ہیں

ماورائے جہاں سے آئے ہیں

آج ہم خمستاں سے آئے ہیں

اس قدر بے رخی سے بات نہ کر

دیکھ تو ہم کہاں سے آئے ہیں

ہم سے پوچھو چمن پہ کیا گزری

ہم گزر کر خزاں سے آئے ہیں

راستے کھو گئے ضیاؤں میں

یہ ستارے کہاں سے آئے ہیں

اس قدر تو برا نہیں جالبؔ

مل کے ہم اس جواں سے آئے ہیں

حبیب جالب

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1528) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Habib Jalib, Marwaye Jahan Se Aye Hain in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 76 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Habib Jalib.