Talism Koh E Nida Jab Bhi Toot Jaye Ga

طلسم کوہ ندا جب بھی ٹوٹ جائے گا

طلسم کوہ ندا جب بھی ٹوٹ جائے گا

تو کاروان صدا بھی پلٹ کے آئے گا

کھنچی رہیں گی سروں پر اگر یہ تلواریں

متاع زیست کا احساس بڑھتا جائے گا

ہوائیں لے کے اڑیں گی تو برگ آوارہ

نشان کتنے نئے راستوں کا پائے گا

میں اپنے قتل پہ چیخا تو دور دور تلک

سکوت دشت میں اک ارتعاش آئے گا

کواڑ اپنے اسی ڈر سے کھولتے نہیں ہم

سوا ہوا کے انہیں کون کھٹکھٹائے گا

ہوائیں گرد سے ہر راستے کو ڈھک دیں گی

ہمارے بعد کوئی قافلہ نہ جائے گا

یوں ہی ڈبوتا رہا کشتیاں اگر سیلاب

تو سطح آب پہ چلنا بھی آ ہی جائے گا

منظور ہاشمی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(394) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Manzoor Hashmi, Talism Koh E Nida Jab Bhi Toot Jaye Ga in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 18 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Manzoor Hashmi.