Meri Kahani Tri Kahani Se Mukhtalif Hai

مری کہانی تری کہانی سے مختلف ہے

مری کہانی تری کہانی سے مختلف ہے

کہ جیسے آنکھوں کا پانی، پانی سے مختلف ہے

وہ ایک لمحہ جو دسترس میں نہیں رہا ہے

وہ زندگی بھر کی رائیگانی سے مختلف ہے

یہ جھیل آنکھیں ہمیں جو پیغام دے رہی ہیں

وہ تیرے ہونٹوں کی ترجمانی سے مختلف ہے

تری جدائی کا حادثہ ایسا حادثہ ہے

جو ہر حقیقت سے ہر کہانی سے مختلف ہے

میں دشت وحشت کی ریت ہوں اور تو ایک دریا

مری روانی تری روانی سے مختلف ہے

اظہر عباس

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(893) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Syed Azhar Abbas, Meri Kahani Tri Kahani Se Mukhtalif Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 18 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.1 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Syed Azhar Abbas.