Koi Is Ke Barabar Ho Gaya Hai

کوئی اس کے برابر ہو گیا ہے

کوئی اس کے برابر ہو گیا ہے

یہ سنتے ہی وہ پتھر ہو گیا ہے

جدائی کا ہمیں امکان تو تھا

مگر اب دن مقرر ہو گیا ہے

سبھی حیرت سے مجھ کو تک رہے ہیں

یہ کیا تحریر مجھ پر ہو گیا ہے

اثر ہے یہ ہماری دستکوں کا

جہاں دیوار تھی در ہو گیا ہے

جسے دیکھو غزل پہنے ہوئے ہے

بہت سستا یہ زیور وہ گیا ہے

وکاس شرما راز

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(329) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of VIKAS SHARMA RAAZ, Koi Is Ke Barabar Ho Gaya Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 32 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of VIKAS SHARMA RAAZ.