Har Aik Baat Nah Ku Zaher Si Hamari Lagey

ہر ایک بات نہ کیوں زہر سی ہماری لگے

ہر ایک بات نہ کیوں زہر سی ہماری لگے

کہ ہم کو دست زمانہ سے زخم کاری لگے

اداسیاں ہوں مسلسل تو دل نہیں روتا

کبھی کبھی ہو تو یہ کیفیت بھی پیاری لگے

بظاہر ایک ہی شب ہے فراق یار مگر

کوئی گزارنے بیٹھے تو عمر ساری لگے

علاج اس دل درد آشنا کا کیا کیجے

کہ تیر بن کے جسے حرف غم گساری لگے

ہمارے پاس بھی بیٹھو بس اتنا چاہتے ہیں

ہمارے ساتھ طبیعت اگر تمہاری لگے

فرازؔ تیرے جنوں کا خیال ہے ورنہ

یہ کیا ضرور وہ صورت سبھی کو پیاری لگے

احمد فراز

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(476) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmed Faraz, Har Aik Baat Nah Ku Zaher Si Hamari Lagey in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 154 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmed Faraz.