Falak Pay Chaand Nahi Koi Obr Parah Nahi

فلک پہ چاند نہیں کوئی ابر پارہ نہیں

فلک پہ چاند نہیں کوئی ابر پارہ نہیں

یہ کیسی رات ہے جس میں کوئی ستارہ نہیں

یہ انکشاف ستاروں سے بھر گیا دامن

کسی نے اتنا کہا جب کہ وہ ہمارا نہیں

زمیں بھنور ہو جہاں آسماں سمندر ہو

وہاں سفر کسی ساحل کا استعارہ نہیں

میں مختلف ہوں زمانے سے اس لیے شاید

کسی خیال کی گردش مجھے گوارہ نہیں

خزاں کے موسم خاموش نے صدا دی ہے

جمال دوست نے پھر بھی مجھے پکارا نہیں

جو ریزہ ریزہ نہیں دل اسے نہیں کہتے

کہیں نہ آئینہ اس کو جو پارہ پارہ نہیں

میں زخم زخم سہی پھر بھی مسکرایا ہوں

ظفرؔ بہ نام ظفر ہار کے بھی ہارا نہیں

احمد ظفر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(521) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Ahmed Zafar, Falak Pay Chaand Nahi Koi Obr Parah Nahi in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 36 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Ahmed Zafar.