Nensi Kehet

نینسی کہت

تم اتنا درد لائی ہو کہاں سے

یہ کن جنموں کا بوجھا ڈھو رہی ہو

تمہاری آنکھ میں، لب پر ہنسی ہے

مگر پورے بدن سے رو رہی ہو

یہ کیسی ان کہی باتوں کا دکھ ہے

تناؤ کی گواہی ریشہ ریشہ

مگر یہ معجزہ کیسے کیا ہے

نظر آتی نہیں ہو جورہی ہو

اکائ دیکھنے میں اب تو ہو تم

مگر ہر ماس پیشی کہہ رہی ہے

ہمیشہ سے نہیں تھیں، دو رہی ہو

سہے جاتی ہو تن پر جوبھی لاگے

تمہاری روح میں جا کر پھَلے گی

بدن کھیتی میں پِیڑابو رہی ہو

ذرا دیکھو تمہارے انگ انگ میں

چبھے کانٹوں کو چن لینے کی دھن میں

کہاں تک دکھ کا ساگرآگیا ہے

تمہارا درد دھاراؤں کی صورت

مری پوروں کے اندر آ گیا ہے

فاخرہ نورین

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1292) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Fakhra Noreen, Nensi Kehet in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Hope Urdu Poetry. Also there are 23 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Fakhra Noreen.