Yaad Ayen Ge Zamanay Ko Misalon Ke Liye

یاد آئیں گے زمانے کو مثالوں کے لیے

یاد آئیں گے زمانے کو مثالوں کے لیے

جیسے بوسیدہ کتابیں ہوں حوالوں کے لیے

دیکھ یوں وقت کی دہلیز سے ٹکرا کے نہ گر

راستے بند نہیں سوچنے والوں کے لیے

آؤ تعمیر کریں اپنی وفا کا معبد

ہم نہ مسجد کے لیے ہیں نہ شوالوں کے لیے

سالہا سال عقیدت سے کھلا رہتا ہے

منفرد راہوں کا آغوش جیالوں کے لیے

رات کا کرب ہے گلبانگ سحر کا خالق

پیار کا گیت ہے یہ درد اجالوں کے لیے

شب فرقت میں سلگتی ہوئی یادوں کے سوا

اور کیا رکھا ہے ہم چاہنے والوں کے لیے

فارغ بخاری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1035) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Farigh Bukhari, Yaad Ayen Ge Zamanay Ko Misalon Ke Liye in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 43 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Farigh Bukhari.