Honay Wala Tha Ik Hadsa Reh Gaya

ہونے والا تھا اک حادثہ رہ گیا

ہونے والا تھا اک حادثہ رہ گیا

کل کا سب سے بڑا واقعہ رہ گیا

رات آنگن میں اتری نہیں چاندنی

چاند شاخوں میں الجھا ہوا رہ گیا

ہم نے کہہ سن لیا مطمئن ہو گئے

اور اب کہنے سننے کو کیا رہ گیا

صبح ہوگی کہانی بنے گی کوئی

زندگی کا یہی مسئلہ رہ گیا

میں نے نفرت کی کھائی پہ پل رکھ دیا

پھر بھی ٹوٹا ہوا سلسلہ رہ گیا

سب ڈرامے کے کردار گھر چل دیے

سامنے ایک پردہ پڑا رہ گیا

یہ بھی تکلیف دہ اک سزا ہی تو ہے

شاخ میں ایک پتا ہرا رہ گیا

میں کسی کے یہاں وقت کیا کاٹتا

اپنا ہی گھر شفقؔ ڈھونڈھتا رہ گیا

فاروق شفق

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(527) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Farooq Shafaq, Honay Wala Tha Ik Hadsa Reh Gaya in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad, Social Urdu Poetry. Also there are 18 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.1 out of 5 stars. Read the Sad, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Farooq Shafaq.