Nigah Arzoo Amooz Ka Charcha Nah Ho Jaye

نگاہ آرزو آموز کا چرچا نہ ہو جائے

نگاہ آرزو آموز کا چرچا نہ ہو جائے

شرارت سادگی ہی میں کہیں رسوا نہ ہو جائے

انہیں احساس تمکیں ہو کہیں ایسا نہ ہو جائے

جو ہونا ہو ابھی اے جرأت رندانہ ہو جائے

بظاہر سادگی سے مسکرا کر دیکھنے والو

کوئی کم بخت ناواقف اگر دیوانہ ہو جائے

بہت ہی خوب شے ہے اختیاری شان خودداری

اگر معشوق بھی کچھ اور بے پروا نہ ہو جائے

ارادے باندھتا ہوں سوچتا ہوں توڑ دیتا ہوں

کہیں ایسا نہ ہو جائے کہیں ایسا نہ ہو جائے

الٰہی دل نوازی پھر کریں وہ مے فروش آنکھیں

الٰہی اتحاد شیشہ و پیمانہ ہو جائے

مری الفت تعجب ہو گئی توبہ معاذ اللہ

کہ منہ سے بھی نہ نکلے بات اور افسانہ ہو جائے

یہ تنہائی کا عالم چاند تاروں کی یہ خاموشی

حفیظؔ اب لطف ہے اک نعرۂ مستانہ ہو جائے

حفیظ جالندھری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(700) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Hafeez Jalandhari, Nigah Arzoo Amooz Ka Charcha Nah Ho Jaye in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 104 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Hafeez Jalandhari.