Bigarne Wala Kissi Din Sanwar Hi Jaye Ga

بگڑنے والا کسی دن سنور ہی جائے گا

بگڑنے والا کسی دن سنور ہی جائے گا

مزاج دوست بالآخر سدھر ہی جائے گا

مریض عشق ابھی بیکلی میں ہے لیکن

بخار ایک دن اس کا اتر ہی جائے گا

جو پھول آج سر شاخ ہے مہکتا ہوا

وہ ایک موج صبا میں بکھر ہی جائے گا

گزر رہی ہے پریشان زندگی لیکن

چلے چلو کہ یہ رستہ گزر ہی جائے گا

اسی خیال سے نیکی ضرور کرتی ہوں

کہ بوند بوند سے تالاب بھر ہی جائے گا

جو گر کے راہ میں اٹھنے کا عزم رکھتا ہے

وہ پار آگ کا دریا بھی کر ہی جائے گا

یہ سوچ کر ہی روابط میں عجز بھی رکھنا

ہے جس کی خاک جہاں کی ادھر ہی جائے گا

سبیلہؔ خواب میں وہ سیر کو اگر نکلے

اڑن کھٹولے پہ پریوں کے گھر ہی جائے گا

سبیلہ انعام صدیقی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(482) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Sabeela Inam Siddiqui, Bigarne Wala Kissi Din Sanwar Hi Jaye Ga in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 23 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Sabeela Inam Siddiqui.