Musafir Chaltay Rehtay Hain

مسافر چلتے رہتے ہیں

کبوتر مقبروں پر رات دن

دن رات رہتے ہیں

مسافر چلتے رہتے ہیں

کبوتر دودھ ایسے پر

سیہ دیوار کی جالی سے آتی

دھوپ کی کنگھی سے

جب ہموار کرتے ہیں

تو بوڑھے مقبروں پر

کائی کے جنگل مہکتے ہیں

مسافر چلتے رہتے ہیں

یہ بنجارے

جنہیں بس چند لمحے ہی ٹھہرنا ہے

انہیں روکو نہیں

یہ موسمی آبی پرندے ہیں

جنہیں میلے پروں کے ساتھ اڑنا ہے

انہیں رکنا نہیں آتا

انہیں رکنا نہیں آتا

وزیر آغا

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(359) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Wazir Agha, Musafir Chaltay Rehtay Hain in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 101 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Wazir Agha.