بند کریں
ادب مضامین

مزید عنوان

اردو ادب میں نیا اضافہ

باطنی اور ظاہری آنکھ

عالم آخرت کے منکریہ دلیل پیش کرتے ہیں کہ اگر عالم آخرت ہے تو میں اس کو دیکھ سکتا لیکن کسی کے دیکھنے یا نہ دیکھنے سے اس چیز کا انکار کیسے ہوسکتا ہے ؟ بچہ عقل کے احوال کونہیں دیکھ سکتا لیکن عقل مند اس کا انکار کبھی نہیں کرے گا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

چھوٹے موٹوں کا بچپن

کسی اخبار میں یہ خبر پڑھی تھی کہ ایک معروف گلوکار نے اپنا وزن ستّر کلو ( 70kg)گھٹا لیا۔ ہم اگر ایسا کریں تو ہمار ا کُل وزن گھٹ کر منفی پانچ کلو، یعنی minus 5kg رہ جائے۔ بات سوچنے کی ہے۔ آپ ہی سوچیں …

"مضمون" میں شائع کیا گیا

ٹرکّی ِ اَدب

شاعری سے ہماری دلچسپی اُس عمر میں ہی شروع ہو گئی تھی ،جب دادی ماں کی نثری کہانیوں کا سلسلہ تھم گیاتھا اور جب سے ہم نے ٹرکوں کے پیچھے دوڑنا شروع کیاتھا۔ شُومیِ قسمت کہ اُس وقت خدوخال ایسے نہ تھے کہ ہمارے ہاتھ میں کوئی شاعری کی کتاب تھماتا اور کہتا،

"مضمون" میں شائع کیا گیا

دنیا کی حقیت

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں جب خلیفہ ہارون الرشید مصر پا قابض ہوا تواس نے کہا کہ یہ وہ ملک ہے کہاں کے حاکم فرعون نے خدائی کا دعویٰ کیا پس میں اس پر کسی ذلیل کو حاکم کروں گا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

شیطان شر پھیلانے کے لئے انسان کی جانب آتا ہے

جسم پنجرے کے مانند ہے اس لئے جان کے لئے اندرونی اور بیرونی لوگوں کے مکر کی وجہ سے کانٹا ہے۔ یہ بھی اس کواپنا دوست بتاتا ہے اور وہ اسے کہتا ہے کہ تیرے جیسا کوئی موجود نہیں توکمال ‘ فضل ‘ احسان اور سخاوت کاسر چشمہ ہے۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

خاکسار بن کر ہی انسان سرفراز ہوتا ہے

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں کہ ایک سال دریائے نیل میں پانی کم تھا جس سے مصریوں کی زمینیں سیراب نہ ہوسکیں۔ اس سال بارشیں بھی معمول کے مطابق نہ ہوئیں اور قحط کے آثار پیدا ہوگئے۔لوگوں نے جب قحط کی صورتحال دیکھی تو دعائیں مانگنا شروع کردیں۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

تمام مکاری نفس کی گمراہی میں پنہاں ہیں

مولانا محمد جلال الدین رومی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں کہ تمام گمراہیاں اور برائیاں نفس کی مکاریوں میں پوشیدہ ہیں۔ نفس کی اصلاح کرواور اگر تم نے نفساتی خواہشات پرقابو پالیا تم اعلیٰ مراتب کے حقدار ٹھہرو گے۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

رونمائی افکار تازہ

سنیئر کالم نویس وصحافی ڈاکٹر عارف محمود کسانہ کی تنصیف ” افکار تازہ “ کی رونمائی 20اگست کو اوسلو میں ادبی تنظیم دریچہ کے زیر اہتمام منعقدہ ہوئی۔ اس تقریب میں رقم کے کتاب پر بیان کئے گئے تاثرات قارئین کی دلچسپی کے لئے پیش خدمت ہیں۔

"اردو ادب" میں شائع کیا گیا

بدکلامی کا اثر

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں کہ ایک شہد فروش نہایت خوش اخلاق اور شیریں زبان تھا اس کی اس خوش اخلاقی کی وجہ سے لوگوں کاایک ہجوم اس کے گرد جمع رہتا تھا۔ جس طرح مکھیاں شہد کے گرد جمع ہوتی ہیں لوگ اس کے گرد جمع ہوتے تھے اور اس کا شہد دیکھتے ہی دیکھتے بک جاتا تھا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

توبہ اور ندامت کی کوئی قیمت نہیں

احمقوں کے وعدوں اور دعوؤں کا کچھ اعتبار نہیں۔ قرآن مجید ہے کہ اگر ان کو دوبارہ زندگی بھی دی جائے تو یہ بدعہدی کریں گے۔ عہدوں کی وفا کرنا توعقل مندوں کا کام ہے۔ پروانے میں عقل کی کمی ہے جس کی وجہ سے وہ شمع کی آگ کی سوزش کو بھول جاتا ہے۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

درویش کی منت

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ ایک درویش کا قصہ بیان کرتے ہیں کہ اس کی بیوی حاملہ تھی اس نے منت مانگی کہ اگر میرے گھر نرینہ اولاد ہوئی تو میں اپنے پاس موجود گوڈری کے علاوہ جو کچھ ہے سب صدقہ کردوں گا۔ وہ درویش بڑھاپے کو پہنچ چکا تھا اور اس سے قبل اس کے ہاں کوئی اولاد نہ تھی۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

خوف اور بھلائی کی کشمکش

اے ضیاء الحق حسام الدین ‘ مثنوی کو کشادہ میدان عطا کردیجئے۔ دنیا میں آپ رحمتہ اللہ علیہ حضرت خضر علیہ السلام کی مانند ہیں کہ آپ رحمتہ اللہ علیہ پریشان لوگوں کی حوصلہ افزائی کرتے ہیں، اور بے کسوں کی دستگیری فرماتے ہیں۔ لوگوں کی نظربد کی وجہ سے میں آپ رحمتہ اللہ علیہ کے معمولی احوال کا بیان نہیں کرتا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

کمزوروں سے خیر خواہی کرو

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ عجم کے ایک بادشاہ کی کہانی بیان کرتے ہیں کہ وہ اپنی رعایا اس قدر ظلم کرتا تھا کہ اس کی رعایا ملک چھوڑ کردوسرے ممالک میں آباد ہوناشروع ہوگئی۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

تحریک پاکستان میں شعراء اور ادباء کا کردار

جشن آزادی کے موقع پر سرکردہ ادبی شخصیات کااظہار خیال
شب ظلمت میں گزاری ہے ‘ اٹھ وقت بیداری ہے

"مضمون" میں شائع کیا گیا

حق تعالیٰ کی ذات بہت ہی غفورورحیم ہے

حضور نبی کریم ﷺ کا فرمان ہے کہ عورت عقل مندا ورصاحب دل لوگوں پر غالب رہتی ہے برخلاف اس کے کہ جاہل لوگ عورتوں پر غلبہ پاتے ہیں کیونکہ وہ سختی اور اکھڑ پن میں زندگی بسر کرتے ہیں۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

ادب و ثقافت

”ادب و ثقافت انٹرنیشنل“ کا پندرھواں شمارہ موصول ہوا۔ ”ادب و ثقافت“ کا نام تو پہلے سے سن رکھا تھا لیکن دیکھنے کا اتفاق پہلی بار ہوا۔ ”ادب و ثقافت“ بیاد بیدل حیدری شائع کیا جاتا ہے۔ اردو دنیا میں بیدل حیدری مرحوم کے نام سے کون واقف نہ ہو گا۔ مرحوم بے مثل شاعر تھے۔ ان کے بے شمار اشعار ادبی دنیا میں یاد گار ہیں۔

"ادبی رسائل و جرائد" میں شائع کیا گیا

معمولی نیکی بھی فائدہ پہنچاسکتی ہے

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں کہ ایک نیک فطرت شخص نے مصیبت کے وقت ایک بوڑھے شخص کی مدد کی۔ کچھ عرصہ بعد ایسے حالات پیداہوئے کہ اس نوجوان کو کسی جرم میں گرفتار کرلیا گیا اور اس جرم کی سزا موت تھی ۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

غرور کرکے اپنے تمام اعمال برباد کردئیے

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں کہ حضرت عیسیٰ علیہ السلام کے زمانے میں ایک سرکش اور فاسق وفاجر شخص مخلوق خدا کیلئے باعث عذاب تھا۔ اس شخص کا تمام وقت لہودلعب میں اور لوگوں کو تنگ کرنے میں گزرتاتھا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

یہ تو نری تباہی ہے

ایک سادہ لوح شخص علی الصبح حضرت سلیمان علیہ السلام کی خدمت میں حاضر ہوا۔ آپ علیہ السلام نے پوچھا کہ تم اتنے پریشان کیوں ہو؟ اس نے عرض کی کہ حضرت عزرائیل علیہ السلام نے مجھ پر بڑی خوفناک نگاہ ڈالی ہے۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

خوف

(مختصر ترین افسانہ)
اْس کی آنکھیں ایک ہی سمت ٹِک ٹِکی باندھے مسلسل مجھے تکے جارہی تھیں۔۔۔

"افسانہ" میں شائع کیا گیا