بند کریں
ادب مضامین

مزید عنوان

اردو ادب میں نیا اضافہ

خوف

(مختصر ترین افسانہ)
اْس کی آنکھیں ایک ہی سمت ٹِک ٹِکی باندھے مسلسل مجھے تکے جارہی تھیں۔۔۔

"افسانہ" میں شائع کیا گیا

سخاوت اور کنجوسی کا موازنہ

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں کہ ایک کنجوس شخص کا بیٹا بے حدسخی تھا۔ اس کنجوس کے مرنے کے بعد اس کی ساری دولت اس سخی بیٹے کے ہاتھ آگئی۔ اس نے اپنی سخاوقت کی بدولت اس دولت کو فقراء ومساکین پر خرچ کرنا شروع کردیا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

زہر ولی کامل کے لئے تریاق ہے

زہرولی کامل کے لئے تریاق ہے اور اگر کوئی ولی زہر کھالے تو اس پر اس کا کچھ اثر نہیں ہوتا اور اگر یہی زہر کوئی طالب کھالے تو وہ بے ہوش ہوجاتا ہے۔ حضرت سلیمان علیہ السلام دعا کرتے تھے کہ اے اللہ ! میری جیسی سلطنت میرے بعد کسی کو عطا نہ کرنا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

کتابیں اپنے آباء کی

لندن کی انڈیا آفس لائبریری اور قومی برٹش لائبریری میں اردو کی نہایت پرانی کتابیوں کا ذخیرہ محفوظ ہے۔ برطانوی قانون کے مطابق برصغیر کی کتابوں کے نسخے ان دو کتب خانوں کے لیے بھجوائے جاتے تھے۔ یوں کرتے کرتے وہاں اردو کی 3 ہزار سے زیادہ کتابیں جمع ہو گئیں۔

"مضمون" میں شائع کیا گیا

جون ایلیا۔۔۔

نادرِ روزگار تھے ہم تو: (حصہ سوم)

"مضمون" میں شائع کیا گیا

میاں بیوی

ایک گاؤں میں میاں بیوی رہتے تھے جب ان کے پاس کھانے کو کچھ نہ رہا تو میاں نے اپنی بیوی سے مشورہ کیاکہ اب ہمارا یہاں سے دانہ پانی اٹھ گیا ہے۔ اب ہمیں ایسی جگہ تلاش کرنی چاہیے۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

جس کاکام اسی کو ساجھے

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں کہ ایک مرتبہ میں بلخ سے بامیان کی جانب جارہاتھا اور راستہ پرخطر تھا۔ میری رہنمائی کے لئے ایک نوجوان میرے ہمراہ ہولیا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

کامل ہوناا نجام پر نظر رکھنا ہے

ایک فلسفی کاعقیدہ تھا کہ آسمان انڈے کی مانند ہے اور زمین زردی کی مانند ۔ کسی سوال کرنے والے نے پوچھا کہ زمین آسمان کے درمیان کیسے معلق ہے؟ اس فلسفی نے جواب دیاکہ کشش شش جہات کی وجہ سے جس طرح مقناطیس لوہے کے ٹکڑے کو اپنی جانب کھینچتا ہے۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

جو ہر سونا چاندی ہے

جو کیمیاگری سے یار کوملا

"حکایات" میں شائع کیا گیا

تو ہم پرستی ایک بری لعنت

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ بیان کرتے ہیں کہ ایک دیہاتی کاگدھا مرگیا۔ اس نے اس کاسرکاٹ کر اپنے انگوروں کے باغ میں لٹکادیا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

طاقت ور خارجی

ایک خارجی شخص ہندوستان کے سکی بادشاہ کے علاقہ میں گیا۔ بادشاہ کو جب اسکا علم ہوا اس نے فوراََ اپنا ایک لشکر اس کی طرف بھیجا۔ اس خارجی نے جب لشکر کی طرف دیکھا تو فوراََ امن طلب کیا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

جسم کی دنیا سے نکل جا

حضرت سیدنا عمر فاروق رضی اللہ عنہ نے ایک سارنگی نواز کوگریہ زاری کرتے اور استغراق میں محودیکھ کر فرمایا کہ تیرایہ رونا تیرے ہوش کی علامت ہے۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

شراب شرابی

جب حضرت آدم علیہ السلام نے انگور کے درخت لگائے تو ابلیس لعین نے اپنے شیطانی خاصیت کی وجہ سے ایک شیطانی منصوبہ بنایا اور حضرت آدم علیہ السلام کے لگائے گئے انگور کے پودوں کی جڑوں میں مور کاخون ڈالا اور جب۔۔۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

ظالم کی توبہ قبول نہ ہوگی

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں کہ میں حضرت یحییٰ بن زکریا علیہم السلام کی قبر انور پر جامع مسجد دمشق میں معتکف ہوا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

خود بینی کابیج

سب سے پہلے جس نے اللہ عزوجل کے انواروتجلیات کے مقابلہ میں قیاس کیاوہ ابلیس تھا۔ اس نے کہا کہا آگ مٹی سے یقینا بہتر ہے۔ اللہ عزوجل نے فرمایا کہ نسب کچھ معنی نہیں رکھتی بلکہ تقویٰ اور پرہیزگاری درحقیقت بزرگی کی نشانی ہے۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

کالے جوتے

میری توجہ سب سے پہلے بھڑکیلی نیلی روشنیوں پر مرکوز ہوئی تھی۔ یہ ضرور کوئی ایمبولینس یاپولیس کی گاڑی ہوگی! میں نے سوچا، لیکن بھر میں نے کار کو رودمانز روڈ پرڈال دیا تاکہ میں اپنے مہمان کوہوٹل برگریارل سے لے آؤں۔ مگر کوئی الجھن مجھے پریشان کرتی رہی۔

"افسانہ" میں شائع کیا گیا

جون ایلیا۔۔۔

نادرِ روزگار تھے ہم تو: (حصہ دوم)

"مضمون" میں شائع کیا گیا

جون ایلیا۔۔۔

نادرِ روزگار تھے ہم تو: (حصہ اول)

"مضمون" میں شائع کیا گیا

سات چور

ایک بندے کو خیال آیا کہ اللہ ہروقت اپنااحسان جتاتا رہتا ہے ‘ کبھی کہتا ہے کہ کھانا دیتا ہوں کبھی کہتا ہے کہ روٹی دیتا ہوں‘ کبھی کہتا ہے کہ روٹی دیتا ہوں‘ کبھی کہتا ہے کہ صحت اور تندرستی دیتا ہوں۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

لالچی کے لئے اپنا دروازہ نہ کھولو

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں کہ ایک بادشاہ کے بارے میں مجھے علم ہوا کہ اس نے عیش وعشرت میں رات کودن کررکھا تھا اور کہہ رہاتھا کہ دنیا میں ہمارے لئے اس سے بہتر کوئی وقت نہیں ہوتا

"حکایات" میں شائع کیا گیا