بند کریں
ادب مضامین

مزید عنوان

اردو ادب میں نیا اضافہ

تیری سانسوں میں اور تیری زبان میں وہ تاثیر نہیں

ایک بے وقوف حضرت عیسیٰ علیہ السلام کے ساتھ سفر میں شریک ہوگیا۔ راستہ میں گزر جب ایک پرانی قبر سے ہوا تواس شخص نے حضرت عیسیٰ علیہ السلام سے کہا کہ میں آپ علیہ السلام کو اللہ عزوجل کی ذات کا واسطہ دیتا ہوں کہ۔۔۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

گلابی ربن

انٹرویو کے لیے جب وہ شہر سے کچھ دور ایک بیابان میں بڑی سی سنسان عمارت کے چھوٹے سے دروازے پر پہنچا تو ایک لمحے کے لیے اس نے سوچا کہ شاید وہ کسی غلط پتے پر آگیا ہے۔

"افسانہ" میں شائع کیا گیا

عشق مجازی سے رہائی کی کوئی صورت نہیں

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں کہ ایک پہلوان لوہے کے نیچے میں اپنا پنجہ پھنسا کرزور لگایا کرتاتھا۔ ایک دن اس نے اپنے دل میں ارادہ کیاکہ میں اپنے پنجوں میں اس قدر قوت پیداکروں گا کہ شیر کاپنجہ مروڑ سکوں۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

دانائی کی ایک بہت قیمتی بات

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں کہ حضرت لقمان سیاہ فام تھے۔ آپ ایک دن بغداد کے ایک بازار سے گزررہے تھے کہ ایک شخص نے اپنے گھرکی تعمیر کے لیے آپ کواپنا بھاگا ہوا غلام سمجھ کرمٹی کھودنے کے کام پر لگادیا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

یارِ من بیا

جب ہم دونوں پہلی بار ملے تو اس وقت تک دونوں ہی اپنی زندگی کی پہلی پہلی محبت بھگت چکے تھے۔ محبت کے سفر میں ٹوٹے ہوئے لوگ ایک دوسرے کو ایسے پہچان لیتے ہیں جیسے ستارے جل بجھنے سے پہلے دوسرے ستاروں کا حال جان لیتے ہیں۔

"افسانہ" میں شائع کیا گیا

رائٹنگ ٹیبل

وہ کہانیاں لکھتا تھا اور بے تحاشا لکھتا تھا۔ بچپن سے آج تک جتنی بھی کہانیاں اس نے لکھی تھیں،وہ اس کے قلم پر خود بخود وارد ہوگئی تھیں۔ بہت دفعہ اس نے چاہا کہ وہ آج کہانی نہیں لکھے گا مگر کہانی اس کا گلا دبانے لگتی۔

"افسانہ" میں شائع کیا گیا

جوکسی کورسواکرے وہ بالآخرخو درسواہوتاہے

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں کہ ایک دن حضرت داؤ طائی رحمتہ اللہ علیہ کے ایک مرید نے ان سے کہاکہ حضرت! آج میں نے فلاں کواس حالت میں دیکھا کہ وہ نشہ میں دھت بازار میں گرا ہوا تھا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

صبرکشادگی کاراستہ ہے

ایک شخص رات کے وقت اللہ اللہ کرتاتھااور اس ذکرسے خوب لطف اٹھاتاتھا۔ ابلیس نے اس سے کہا کہ تم بت کی مانندکب تک ایسے کرتے رہوگے؟ اللہ عزوجل کی جانب سے کبھی لبیک کاجواب بھی نہیں آیا۔

"حکایات" میں شائع کیا گیا

اپنے وقار اور مرتبہ پر قائم رہ

حضرت شیخ سعدی رحمتہ اللہ علیہ بیان کرتے ہیں کہ ایک سیاہ گوش ایک شکاری پرندہ جس کے کان کالے، لمبے نوک دار اور کھڑے رہتے تھے جوکہ بلی سے ذرا بڑا ہوتا ہے اس سے لوگوں نے پوچھا کہ تو شیر کے ساتھ رہنا کیوں پسند کرتا ہے؟

"حکایات" میں شائع کیا گیا

گردش۔مدار۔ سٹار

کسے معلوم تھا کہ اکیس سال، سات مہینے اور گیارہ دن کے بعد اچانک تم کہیں سے آؤ گے اور ایک دم مجھ سے یہ پوچھ لو گے ”تم نے میری وجہ سے شادی نہیں کی؟“ اپنے پورے قد سے کھڑے آدھے بازوؤں والی شرٹ پہنے، کنپٹیوں پر سفیدی لیے تم ذرا نہیں بدلے تھے۔

"افسانہ" میں شائع کیا گیا

دستک

دھڑ۔دھڑ۔ دھڑ۔ بالکل نئی طرح کی دستک۔ نہ کوئی جذبہ…نہ محبت …نہ غُصّہ…نہ ہمدردی …بالکل مشین کی طرح۔ دھڑ۔ دھڑ۔دھڑ۔ شاید کوئی دروازے تک گیا ہے۔ نجمہ ہے۔ وہی پیر گھسیٹ گھسیٹ کر چلتی ہے۔

"افسانہ" میں شائع کیا گیا

اُردو کہانی۔۔۔!

دیکھیئے سچی بات یہ ہے کہ محاورے کا محور اور شاعر کا نام سمجھنے میں عقل تھوڑی موٹی ہے۔اب کم علمی میں اعلیٰ ترین ڈگری رکھنے پر کون کون سے "آسکر "ہم کو بذریعہ ڈاک بمع لعن طعن کے مُوصول ہوئے ہیں ہم خود بھی اس سے نا آشنا ہی ہیں۔۔۔ ویسے بھی آگہی عذاب ہے۔۔۔نہ بس اتنی سی بات ہے سمجھ آگئی تو ٹھیک نہیں تو کونسا آپ پر فردِ جرم عائد کر دی جانی ہے۔

"اردو ادب" میں شائع کیا گیا

جیمزواٹ 1819ء۔1736ء

سکالٹ لینڈکے موجدجیمزواٹ کوعموماََدخانی انجن کا موجد قرار دیا جاتا ہے۔ وہ صنعتی انقلاب کی ایک اہم شخصیت تھا۔

"100 عظیم آدمی" میں شائع کیا گیا

ماسٹراور ٹیچر میں فرق ہوتاہے

میرا بیٹا نیانیاسکول میں داخل ہواتو میں نے اسے پوچھا’ بیٹا آپ کے ماسٹروں کے کیانام ہیں؟

"مضمون" میں شائع کیا گیا

جسٹینین اول 565ء۔ 483ء

شہنشاہ جسٹینین کی وجہ شہرت رومی قوانین کے ضابطہ کی تشکیل ہے جو اس کے دورمیں نافذالعمل تھا‘ جسٹینین کے ضابطہ نے قانون میں رومی تخلیقی جوہرکانقش محفوظ کردی۔

"100 عظیم آدمی" میں شائع کیا گیا

جوہن سباسٹینی باخ 1750ء۔ 1685ء

عظیم موسیقار جوہن سباسٹینی باخ ہی وہ پہلا شخص تھا جس نے مغربی یورپ میں موجودہ موسیقی کے سبھی علاقائی رنگ کامیابی کے ساتھ باہم مدغم کردیے۔

"100 عظیم آدمی" میں شائع کیا گیا

اُردو سے بے انصافی

قومی زبان کواس کاحق کب ملے گا؟

"اردو ادب" میں شائع کیا گیا

ہومر (قریب8قبل مسیح)

کئی صدیوں تک ہومر کی نظموں کے اصل مصنف کامسئلہ زیربحث ہے۔ یعنی یہ کہ کب ‘ کہاں ُ کیسے یہ نظمیں ایلیڈاور اویڈیسی لکھی گئی ہیں؟

"100 عظیم آدمی" میں شائع کیا گیا

ورنرہیسنبرگ 1976ء۔1901ء

1932ء میں جرمن ماہر الطبیعیات ورنر کارل ہیسنبرگ کومقادیری میکانیات Quantum Mechanics کی تخلیق میں اہم کردار ادا کرنے پر نوبل انعام برائے طبیعیات دیاگیا۔

"100 عظیم آدمی" میں شائع کیا گیا

تھامس روبرٹ مالتھس 1834ء۔1766ء

1798ء میں ماضی کاایک گمنام انگریز پادری تھامس رابرٹ مالتھس نے ایک مختصر مگرنہایت موثر کتاب”معاشرے کی مستقبل کی پیس رفت پر اثرانداز ہونے کے تناظر میں قانون آبادی پر ایک مضمون ‘ شائع کی۔

"100 عظیم آدمی" میں شائع کیا گیا