Hum Apne Aap Pay Bhi Zahir Kabhi Dil Ka Haal Nahi Karte

ہم اپنے آپ پہ بھی ظاہر کبھی دل کا حال نہیں کرتے

ہم اپنے آپ پہ بھی ظاہر کبھی دل کا حال نہیں کرتے

چپ رہتے ہیں دکھ سہتے ہیں کوئی رنج و ملال نہیں کرتے

ہم جو کچھ ہیں ہم جیسے ویسے ہی دکھائی دیتے ہیں

چہرے پہ بھبھوت نہیں ملتے کبھی کالے بال نہیں کرتے

ہم ہار گئے تم جیت گئے ہم نے کھویا تم نے پایا

ان چھوٹی چھوٹی باتوں کا ہم کوئی خیال نہیں کرتے

تیرے دیوانے ہو جاتے کہیں صحراؤں میں کھو جاتے

دیوار و در میں قید ہمیں اگر اہل و عیال نہیں کرتے

تری مرضی پر ہم راضی ہیں جو تو چاہے سو ہم چاہیں

ہم ہجر کی فکر نہیں کرتے ہم ذکر وصال نہیں کرتے

ہمیں تیرے سوا اس دنیا میں کسی اور سے کیا لینا دینا

ہم سب کو جواب نہیں دیتے ہم سب سے سوال نہیں کرتے

غزلوں میں ہماری بولتا ہے وہی کانوں میں رس گھولتا ہے

وہی بند کواڑ کھولتا ہے ہم کوئی کمال نہیں کرتے

والی آسی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(570) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of WALI AASI, Hum Apne Aap Pay Bhi Zahir Kabhi Dil Ka Haal Nahi Karte in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 21 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of WALI AASI.