Tere Ishq Ne Halat Bana Dali Hai Faqeeroon Jaise

ترے عشق نے حالت بنا ڈالی ہے فقیروں جیسی

ترے عشق نے حالت بنا ڈالی ہے فقیروں جیسی

ترے لبوں کی مسکراہٹ مجھے لگنے لگی ہے تیروں جیسی

یہ ناز و عشوہ لے کر تم میری محفل میں آیا نہ کرو

مجھے تو تری انگلیاں بھی لگنے لگی ہیں شمشیروں جیسی

ہم اپنے تخت دل پہ اک پہنچے ہوئے بادشاہ تھے

تری خوشی کی خاطر ہم نے عادت بنا لی ہے غریبوں جیسی

دیواریں سجا دی ہیں ہم نے ترا نام لکھ لکھ کر

تری ملاقات کیلئے ہم نے حالت بنا لی گھر میں اسیروں جیسی

تری جدائی کے غم کا یہ اثر کہ ہر کوئی نازک مزاج کہتا ہے

ہجر و وصال کی بحث نے عادت بنا ڈالی ہے وکیلوں جیسی

کل تک تو اسے کوئی بھرم نہ تھا، محفل میں میرے وجود کا

آج اچانک اس کی طبیعت بھی ہو گئی ہے شرمیلوں جیسی

نئے آنے والے تری محفل میں بہک جاتے ہیں

تری شراب دید پی کر ہمارے دل بھی مہک جاتے ہیں

ہر طرف تُوہی نظر آیا مجھے ،دیکھا میں نے جہاں سے

تری ٹوٹی ہوئی تصویر نکلی میرے جلے ہوئے مکاں سے

تری یادوں پہ گہن نہ آ جائے کہیں غم مکان کا

نڈھال تری جدائی سے ہوں مغموم نہیں آگ کے زیاں سے

آہ تم نے کیا خوب بہانہ تراشا ہے عدم وقت فراغ کا

ذرا سوچو تو ترا چمن کتنا دور ہے میرے آشیاں سے

کبھی تجھے ستم یاد آتا ہے کبھی تری نیت میں فطور آتا ہے

ہم سمجھ لیتے ہیں ترا ارادہ ترے انداز بیاں سے

پیدا نہ ہو سکے گا کبھی کوئی پھول میری لحد پر

میرے غم کا لاوہ بھی کم نہ تھا کسی آتش فشاں سے

ترے فراق میں تراوش اشک تجھے دستور عام نظر آتا ہے

تُو کیا جانے بحر اشک کے قطرے آتے ہیں کہاں سے

یہ سوچ کر خود کو ڈبویا تھا میں نے دریا میں

لوگوں سے سُنا تھا وہ اپنا عکس دیکھتے ہی دریا میں!

سردار زبیر احمد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(304) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Sardar Zubair Ahmed, Tere Ishq Ne Halat Bana Dali Hai Faqeeroon Jaise in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 30 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Sardar Zubair Ahmed.