Naseem Subha Bahar Aaye Dil Hazeen Ko Qarar Aaye

نسیم‌ صبح بہار آئے دل حزیں کو قرار آئے

نسیم‌ صبح بہار آئے دل حزیں کو قرار آئے

کلی کلی لے کے منہ اندھیرے صباحت روئے یار آئے

اداس راتوں کی تیرگی میں نہ کوئی تارا نہ کوئی جگنو

کسی کا نقش قدم ہی چمکے تو نور کا اعتبار آئے

یہ شعلہ سامانیٔ تکلم یہ آئنہ خانۂ تبسم

جگر سے جیسے دھواں سا اٹھے نظر کو جیسے خمار آئے

اسی کی خاطر خزاں زدہ دل نے جامۂ چاک اپنا بدلا

کہ جشن‌ جمہور انقلاب چمن کا آئینہ دار آئے

حنیف فوق

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(704) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Hanif Fouq, Naseem Subha Bahar Aaye Dil Hazeen Ko Qarar Aaye in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 11 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Hanif Fouq.