MENU Open Sub Menu

Qais K Qabeelay Ka Fard

قیس کے قبیلے کا فرد ۔۔ مبشر سعید

Qais K Qabeelay Ka Fard

مبشر سعید کی شاعری پر رمزی آثم کا ایک خوبصورت مضمون

مبشر سعید کا شمار نئی نسل کے ان چند شعراء میں شمار ہوتا ہے جو اپنی محنت اور لگن کے باعث اس ہجوم میں اپنی جگہ بنا پائے ہیں. بہت کم وقت میں بہت زیادہ کامیابیاں سمیٹنے والا یہ نوجوان جب وجد میں آتا ہے تو نئی نظم تخلیق کرتا ہے.رقص۔

دھمال،سفر مبشر سعید کے بنیادی استعارے ہیں.۔دشت میں دھمال ڈالتا یہ نوجوان مجھے قیس کے قبیلے کا کوئی فرد لگتا ہے.مبشر سعید کے کلام سے چند منتخب اشعار آپ دوستو کے ذوق مطالعہ کی نزر..

تو نہیں مانتا مٹی کا دھواں ہو جانات
تو ابھی رقص کروں ، ہو کے دکھا وں تجھ کو
خواب تو زاد سفر ہوتے ہیں
اور میں زاد سفر چھوڑ آیا
دل وہ درویش جو ہر ساعت مشکل کے حضور
جب بھی آتا ہے بلا خوف و خطر آتا ہے
اب ذرا دھیان سے کر سامنا اے رنگ غرور !
اب ترے سامنے اک خاک بسر آتا ہے
میرا دشمن مرے اندر ہی چھپا بیٹھا ہے
مجھ کو خود اپنی طرف تیر چلانے ہوں گے
یہ کیسا عشق ہے جو آنکھ تک نہیں آتا
یہ کیسی آگ ہے جو روشنی سے عاری ہے
ہم نے لے دے کے یہی ایک محبت کی ہے
فقط فراق کو ہم امتحاں سمجھتے تھے
ہم وفا کیش ! زمانے کے ستاے هوئے لوگ
زندگی ! دیکھ ترا ساتھ نبھائے هوئے ہیں
عشق میں عالم تفریق نہیں ہوتا میاں
تو نے اس دشت میں دیوار اٹھائی ہوئی ہے
تیری صورت جو میں دیکھوں تو گماں ہوتا ہے
تو کوئی نظم ہے جو وجد میں آئی ہوئی ہے
ہاتھ میں ہاتھ لئے پھرتے ہیں
ہم تجھے سات لئے پھرتے ہیں
باندھ کر ایک دیے کی لو میں
ہجر کی رات لئے پھرتے ہیے
مرنے والوں کو کہاں دفن کیا
ہم انھیں ساتھ لئے پھرتے ہیں
دکھ پرندوں کی طرح شور مچا سکتے ہیں
ہجر پیڑوں پہ نمودار بھی ہو سکتا ہے
گھر کے آنگن میں لگا پیڑ کٹا ہے جب سے
ہم تری بات پرندوں کو سنانے سے گئے
ہاں مجھے عشق ہو گیا ہے دوست
ہاں مرے ہاتھ میں ستارہ ہے
اپنے ایمان سے بتا مجھے کو
کیا مرے بن ، ترا گزارا ہے ؟؟
شاہ عادل ہے مگر شاہ کے دربان سبھی
ڈھونڈتے پھرتے ہیں زنجیر ہلائی کس نے؟؟
وہ پیڑ لگانے کا بھلا سوچتا کیسے ؟
اس کی تو پرندوں سے رفاقت ہی نہیں تھی
خوب اگلتا رہتا ہوںآنکھوں کی نگرانی میں
اپنا جیون ہار دیاجذبوں کی من مانی میں
تجھ سے تو بے تکلفی ہے مری
تو مرا دوست ہے خدا تو نہیں
آج جس دوست نے دھتکار دیا ہے مجھے کو
ہم اسی دوست پہ قربان ہوا کرتے تھے
موسم عشق دھمالوں میں بدل جاتا تھا
ہم ترے دھیان میں بے دھیان ہوا کرتے تھے
زندگی نے مجھے مہلت ہی نہیں دی ، ورنہ
میں تجھے عشق میں اقرار وصیت کرتا
یہ جو ہم لوگ ہیں چاہت کے نوازے ہوے لوگ
بات کرتے ہیں تو کرتے ہیں زبانی دل کی.
دن نکلتے ہی نکل آتے ہیں گھر سے باھر
شام کو سوچتے رهتے ہیں ، کدھر جانا ہے
اب مرا عشق دھمالوں سے کہیں آگے ہے
اب ضروری ہے کے میں وجد میں لاؤں تجھ کو
انکار کی لذت سے نہ اقرار جنوں سے
یہ ہجر کھلا مجھ پہ کسی اور فسوں سے
اے یار ! کوئی بول محبت سے بھرا بول
کیا سمجھوں بھلا میں تری ہاں سے تری ہوں سے
حلقہ دار پہ آیا ہوں بڑی شان کے ساتھ
حاکم شہر ! ترے ہوش اڑاتا ہوا میں
جہاں جہاں پہ محبت دھمال ڈالتی ہےو
ہاں وہاں سے قلندر نکلنے والے تھے
خواب سننے کے لئے خود ہی چلے آئے ہیںآ
آج یاروں نے مری شام سہانی کی ہے

(273) ووٹ وصول ہوئے

متعلقہ شاعر

مزید مضامین

Shairi K Baray Me

کچھ شاعری کے بارے میں ( نوید صادق )

shairi k baray me

Iliyas Babur Aewan Ki Shaairi Par Shams Ur Rehman Farooqi Sahib Ka Mazmon

الیاس بابر اعوان کی شاعری پر شمس الرحمن فاروقی صاحب کا مضمون

iliyas babur aewan ki shaairi par Shams ur rehman farooqi sahib ka mazmon

Zafar Gurakhpuri .... Aik Ehd, Aik Shair

ظفر گورکھپوری ۔۔۔۔۔۔ ایک عہد، ایک شاعر

Zafar Gurakhpuri .... aik ehd, aik shair

Kashif Hussain Ghayr Ki Shaeri Se Intikhab By Adab Nama

ادب نامہ کی جانب سے کاشف حسین غائر کی شاعری سے انتخاب

Kashif Hussain Ghayr ki shaeri se intikhab by Adab Nama

Majeed Amjad Ki Shaeri Me Koniyati Science Ka Vision

مجید امجد کی شاعری میں کَونیاتی اور سائنسی وژن ( سہ ماہی کاراں )

Majeed Amjad ki shaeri me koniyati science ka vision

Qais K Qabeelay Ka Fard

قیس کے قبیلے کا فرد ۔۔ مبشر سعید

qais k qabeelay ka fard

Aor Dhang Se Khawb Likhnay Wala Shaair ...Daniyal Tareer

اور ڈھنگ سے خواب لکھنے والا شاعر ۔۔۔۔۔ دانیال طریر

Aor dhang se khawb likhnay wala shaair ...Daniyal Tareer

Shaheen Abbas Ki Shaairi Se Intekhab

شاہین عباس کی شاعری میں سے انتخاب

Shaheen Abbas ki shaairi se intekhab

Udasi Ka Khaaliq Abrar Ahmed By Faheem Jozi

اداسی کا خا لق ۔ابرار احمد۔ از ۔فہیم جوزی (معروف شاعر، نقاد و براڈ کا سٹر

Udasi ka khaaliq Abrar Ahmed by Faheem Jozi

Ahmad Khiyal Ki Shaeri Se Intikhab By Adab Nama

ادب نامہ کی طرف سے احمد خیال کی شاعری سے انتخاب

Ahmad Khiyal ki shaeri se intikhab by Adab Nama

Khawb KamKhawb

خواب کمخواب

Khawb KamKhawb

Majeed Amjad Ki Nazm Nigari

مجید امجد کی نظم نگاری

Majeed Amjad ki Nazm nigari

Afzal Khan Aor Ik Umr Ki Muhlat

افضل خان اور اک عمر کی مہلت

Afzal Khan aor ik umr ki muhlat

Hammad Niazi Ki Shaeri Se Intikhab By Adab Nama

ادب نامہ کی جانب سے حماد نیازی کی شاعری سے انتخاب

Hammad Niazi ki shaeri se intikhab by Adab Nama

Wasee Canvas Ka Shaair, Shaheen Abbas

وسیع کینوس کا شاعر ۔۔ شاہین عباس

Wasee canvas ka shaair, Shaheen Abbas

Kashif Majeed Ki Shaairi Se Intekhab

کاشف مجید کی شاعری سے انتخاب

Kashif Majeed ki shaairi se intekhab

Your Thoughts and Comments

Qais K Qabeelay Ka Fard. Read Special Urdu Poetry related articles, Latest Poetic Columns & Tributes on Urdu poets. Read article Qais K Qabeelay Ka Fard and other Urdu shaiyre mazameen in Urdu. Read Urdu poets profiles, new poetry and mazameen like Qais K Qabeelay Ka Fard only on UrduPoint.