Ghazals of Munir Niazi - Urdu Ghazal Poetry

منیر نیازی کی غزلیں

دشمنوں کے درمیان شام

Dushmanon Ke Darmiyan Sham

(Munir Niazi) منیر نیازی

دشمن کی طرف دوستی کا ہاتھ

Dushman Ki Taraf Dosti Ka Haath

(Munir Niazi) منیر نیازی

خوبصورت زندگی کو ہم نے کیسے گزارا

Khobsorat Zindagi Ko Hum Ne Kaisay Guzara

(Munir Niazi) منیر نیازی

ایک میں اور اتنے لاکھوں سلسلوں کے سامنے

Aik Main Aur Itnay Lakhoon Silsiloon Ke Samnay

(Munir Niazi) منیر نیازی

اپنے گھر کو واپس جاؤ رو رو کر سمجھاتا ہے

Apne Ghar Ko Wapis Jao Ro Ro Kar Samajhata Hai

(Munir Niazi) منیر نیازی

اشک رواں کی نہر ہے اور ہم ہیں دوستو

Ashk Rawan Ki Nehar Hai Aur Hum Hain Dostoo

(Munir Niazi) منیر نیازی

اتنے خاموش بھی رہا نہ کرو

Itnay Khamosh Bhi Raha Nah Karo

(Munir Niazi) منیر نیازی

تجھ سے بچھڑ کر کیا ہوں میں اب باہر آ کر دیکھ

Tujh Se Bhichar Kar Kya Hon Main Ab Bahar A Kar Dekh

(Munir Niazi) منیر نیازی

اگا سبزہ در و دیوار پر آہستہ آہستہ

Uga Sabza Dur O Deewar Par Ahista Ahista

(Munir Niazi) منیر نیازی

نیل فلک کے اسم میں نقش اسیر کے سبب

Neel Falak Ke Ism Main Naqsh Aseer Ke Sabab

(Munir Niazi) منیر نیازی

ساعت ہجراں ہے اب کیسے جہانوں میں رہوں

Saat Hijran Hai Ab Kaisay Jahanon Main Rahon

(Munir Niazi) منیر نیازی

ڈر کے کسی سے چھپ جاتا ہے جیسے سانپ خزانے میں

Dar Ke Kisi Se Choup Jata Hai Jaisay Sanp Khazanay Main

(Munir Niazi) منیر نیازی

نواح وسعت میداں میں حیرانی بہت ہے

Nawah Wusat Maidan Main Herani Bohat Hai

(Munir Niazi) منیر نیازی

نشیب وہم فراز گریز پا کے لیے

Nasheeb Vahm Fraz Guraiz Pa Ke Liye

(Munir Niazi) منیر نیازی

محفل آرا تھے مگر پھر کم نما ہوتے گئے

Mehfil Aara Thay Magar Phir Kam Numa Hotay Gaye

(Munir Niazi) منیر نیازی

سن بستیوں کا حال جو حد سے گزر گئیں

Sun Bustiyon Ka Haal Jo Had Se Guzar Gayeen

(Munir Niazi) منیر نیازی

آ گئی یاد شام ڈھلتے ہی

Aa Gayi Yaad Sham Dhalte Hi

(Munir Niazi) منیر نیازی

اس شہر سنگ دل کو جلا دینا چاہئے

Is Shehr Sang Dil Ko Jala Dena Chahiye

(Munir Niazi) منیر نیازی

غم کی بارش نے بھی تیرے نقش کو دھویا نہیں

Gham Ki Barish Ne Bhi Tairay Naqsh Ko Dhoya Nahi

(Munir Niazi) منیر نیازی

شہر پربت بحر و بر کو چھوڑتا جاتا ہوں میں

Shehar Parbat Behar O Bar Ko Chorta Jata Hon Main

(Munir Niazi) منیر نیازی

خیال جس کا تھا مجھے خیال میں ملا مجھے

Khayaal Jis Ka Tha Mujhe Khayaal Main Mila Mujhe

(Munir Niazi) منیر نیازی

ہیں رواں اس راہ پر جس کی کوئی منزل نہ ہو

Hain Rawan Is Raah Par Jis Ki Koi Manzil Nah Ho

(Munir Niazi) منیر نیازی

اور ہیں کتنی منزلیں باقی

Aur Hain Kitni Manzilain Baqi

(Munir Niazi) منیر نیازی

ان سے نین ملا کے دیکھو

Un Se Nain Mila Ke Dekho

(Munir Niazi) منیر نیازی

Records 1 To 24 (Total 87 Records)

Urdu Ghazals Poetry by Munir Niazi. Best collection of Ghazal Poetry. Read the Ghazal Shayari of Famous Urdu poet. Munir Niazi Ki Ghazal Shayari. There are 87 Ghazal poetry by the poet added on the site. You can read Love Ghazals, Sad Ghazals, Sufi Ghazals, Naat Ghazals, Hamd and Marsia of the poet on UrduPoint.