میشا شفیع نے گلوکارعلی ظفر پر جنسی ہراساں کرنے کا الزام لگا دیا

علی ظفر نے ایک سے زائد مرتبہ جنسی ہراساں کیا ،اس قسم کے واقعات اسوقت پیش نہیں آئے جب انٹرٹینمنٹ انڈسٹری میں داخل ہوئی کوئی خاتون جنسی ہراسانی سے محفوظ نہیں ، جنسی ہراسانی پر بات کرنا آسان نہیں ،میرا ضمیر اب مجھے مزید خاموش رہنے کی اجازت نہیں دیتا

جمعرات اپریل 18:40

میشا شفیع نے گلوکارعلی ظفر پر جنسی ہراساں کرنے کا الزام لگا دیا
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 اپریل2018ء) نامور پاکستانی اداکارہ و گلوکارہ میشا شفیع نے الزام عائد کیا ہے کہ گلوکار علی ظفر نے انہیں جنسی ہراساں کیا ہے۔میشا شفیع نے سماجی رابطہ سائٹ ٹوئٹر پر اپنے بیان میں کہا کہ ساتھی گلوکار علی ظفر نے انہیں ایک سے زائد مرتبہ جنسی ہراساں کیا اور اس قسم کے واقعات اس وقت پیش نہیں آئے جب وہ انٹرٹینمنٹ انڈسٹری میں داخل ہوئی تھیں۔

میشا شفیع نے کہا کہ بااختیار اور اپنے خیالات رکھنے کے باوجود ان کے ساتھ اس طرح کا واقعہ پیش آیا، اگر ان کے ساتھ ایسا ہوا ہے تو کسی کے ساتھ بھی ہوسکتا ہے۔گلوکارہ نے کہا کہ کوئی خاتون جنسی ہراسانی سے محفوظ نہیں ہے، ہم اپنے معاشرے میں اس پر بولنے سے ہچکچاتے ہیں اور خاموشی کی راہ لیتے ہیں، ہمیں اجتماعی طور پر اپنی آواز بلند کرنی چاہیے تاکہ خاموشی کے کلچر کو توڑا جاسکے۔

(جاری ہے)

میشا شفیع نے کہا کہ جنسی ہراسانی پر بات کرنا آسان نہیں لیکن اس پر خاموش رہنا بھی بہت مشکل ہے، میں خاموش رہنے کے کلچر کو توڑوں گی جو معاشرے میں سرائیت کرچکا ہے۔۔میرا ضمیر اب مجھے مزید خاموش رہنے کی اجازت نہیں دیتا۔یاد رہے کہ میشا شفیع پاکستان ڈرامہ انڈسٹری کی معروف اداکارہ صبا حمید کی صاحبزادی ہیں جنہوں نے ڈرامہ انڈسٹری سے ہی اپنے کیرئیر کا آغاز کیا اور پہلی مرتبہ 2006ء میں ڈرامہ ’’محبت خواب کی صورت میں‘‘ اداکاری کے جوہر دکھائے جس کے بعد 2007ء میں وہ جیو نیوز کے ڈرامہ سیریل ’’یہ زندگی تو وہ نہیں‘‘ میں بھی دکھائی دیں۔

متعلقہ عنوان :