وفاق میں مسلم لیگ (ن) کی حکومت ختم ہونے میں اب صرف 10 دن باقی ہیں ‘وفاق کی بیساکھیوں پر چلنے والی آزاد حکومت کا سہارا ختم ہوتے ہی اس کا خاتمہ ہو جائیگا ‘

جس کے بعد پی ٹی آئی کشمیر کی حکومت کا آغاز ہو گا‘ بھمبر کی سرزمین سے ایک مرتبہ پھر بیوروکریسی کو متنبہ کرتا ہوں کہ وہ اپنی اصلاح کر لیں آزاد کشمیر کے سابق وزیر اعظم و پی ٹی آئی کشمیر کے صدربیرسٹر سلطان محمود چوہدری کا افطار ڈنر سے خطاب

ہفتہ مئی 22:23

بھمبر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 مئی2018ء) آزاد کشمیر کے سابق وزیر اعظم و پی ٹی آئی کشمیر کے صدربیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے کہا ہے کہ وفاق میں مسلم لیگ ن کی حکومت ختم ہونے میں اب صرف 10 دن باقی ہیں وفاق کی بیساکھیوں پر چلنے والی آزاد حکومت کا سہارا ختم ہوتے ہی اس کا خاتمہ ہو جائے گا جس کے بعد پی ٹی آئی کشمیر کی حکومت کا آغاز ہو گا۔ بھمبر کی سرزمین سے ایک مرتبہ پھر بیوروکریسی کو متنبہ کرتا ہوں کہ وہ اپنی اصلاح کر لیں ‘میں نے بیوروکریسی کی ہمیشہ عزت کی ہے لیکن کرپٹ اور بددیانت افسران سن لیں وہ حکومتی وزراء اور دیگر حکومتی لوگوں کے ناجائز غیرقانونی اور خلاف میرٹ احکامات پر عمل نہ کریں کیونکہ کل انہیں اس کا جواب دہ ہونا پڑے گا۔

آزاد کشمیر میں کڑا اور اندھا احتساب ہونے والا ہے ماضی میں جن کی تجوریاں خالی تھیں اب ان کی تجوریوں میں کروڑوں بلکہ اربوں روپے کہاں سے آ گئے پی ٹی آئی کشمیر اقتدار میں آ کر ایسے کرپٹ عناصر سے حساب لے گی ۔

(جاری ہے)

پی ٹی آئی کشمیر اب بڑی اور فیصلہ کن طاقت بن چکی ہے پی ٹی آئی کشمیر کے کارکنان ممبرشپ مہم میں تیزی لائیں عید کے بعد پی ٹی آئی کشمیر کی تنظیم سازی کا آغاز ہو گاتنظیم سازی میں میرٹ کو اولیت دی جائے گی اس سے قبل تنظیم سازی جلد بازی میں کی گئی تھی اب ایسا نہیں ہو گا بھمبر کو ماضی میں پسماندہ رکھا گیا ہم برسراقتدار آ کر بھمبر کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کریں گے ڈاکٹر انعام نے افطار ڈنر کے اجتماع میں ہزاروں افراد اکھٹے کر کے ثابت کر دیا ۔

بھمبر میرا آج بھی سیاسی قلعہ ہے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے بھمبر میں پی ٹی آئی کشمیر ایل اے سات کے سابق امیدوار اسمبلی ڈاکٹر انعام الحق کی طرف سے دیئے گئے افطار ڈنر سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ افطار ڈنر پر آمد کے موقع پر بیرسٹر سلطان محمود کا شاندار استقبال کیا گیا ان کو پھولوں کے ہار پہنائے گئے ۔بیرسٹر سلطان زندہ باد کے نعروں سے فضا گونج اٹھی ۔

افطار ڈنر سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر انعام الحق نے کہا کہ ہم بھمبر میں قبضہ مافیا کے خلاف جدوجہد کرتے رہیں گے۔ جلد آزاد کشمیر میں بیرسٹر سلطان کی حکومت قائم ہونے والی ہے۔ افطار ڈنر کے موقع پر چوہدری ریاض،، چوہدری چوہدری نجیب ایڈووکیٹ، مرید حسین ،رئوف کاشر، حاجی عبداللہ، عمر شہزاد چوہدری امجد، نصیر احمد ایڈووکیٹ چوہدری، شکیل شمائیل ریاض اور دیگر بھی موجود تھے۔

بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے مزید کہا کہ نواز شریف کے بیانیہ نے ثابت کر دیا کہ مودی اور نواز شریف نے ایک سازش کے تحت آزاد کشمیر میں اپنی دم چھلا حکومت قائم کروائی تھی تاکہ تقسیم کشمیر کی سازش کی جا سکے۔ مجھے اسمبلی سے باہر رکھا گیا میںنے اس کے باوجود ایک چیلنج کے طور پر اس سازش کے خلاف آواز بلند کی اور آئندہ بھی کرتا رہوں گا۔***