کمشنر ملتان کی زیر صدارت پھاٹا سکروٹنی کمیٹی کا اجلاس ،ضلع میں کمرشلائزڈ ایریا کا جائزہ لیا گیا

پیر مئی 23:48

ملتان۔ 14مئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 مئی2018ء) کمشنر ملتان ڈویژن بلال احمد بٹ کی زیر صدارت پھاٹا سکروٹنی کمیٹی کا اجلاس منعقدہوا۔ جس میں پھاٹا لینڈ رولز 2017کے تحت ضلع ملتان میں کمرشلائزڈ ایریا کا جائزہ لیا گیا اور گزشتہ اجلاس میں بنائی گئی کمیٹی نے شہر میں ٹریفک کے بہائو کے تسلسل کو قائم رکھنے، رش کو کم کرنے اور کمرشلائزیشن کو مناسب شکل دینے کیلئے سفارشات پیش کیں۔

اس موقع پر کمشنر ملتان بلال احمد بٹ نے کہا کہ بے جاکمرشلائزیشن سے شہر کا حسن گہنا جاتا ہے۔ مناسب کمرشل ایریا کی عدم موجودگی دراصل جگہ جگہ کا روباری مقامات کی افزائش کا باعث بنتی ہے۔ انہوں نے ہدایات جاری کیں کہ کسی بھی جگہ یا عمارت کو 30فٹ سیٹ بیک ، پارکنگ کی مناسب جگہ اور کاروبار کیلئے عمارت میں متبادل تبدیلیوں کے بغیر کمرشلائزیشن کی اجازت ہرگز نہ دی جائے۔

(جاری ہے)

اس موقع پر ڈائریکٹر پھاٹا طاہر جاوید انصاری نے بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ پھا ٹا کے زیرانتظام ممتازآباد میں 19فیصد، گلگشت میں 34 فیصد، نیو ملتان میں 5فیصد جبکہ شجاع آباد میں 6فیصد علاقوں میں کمرشلائزیشن ہوچکی ہے۔ بے ہنگم کمرشلائزیشن کو روکنے کیلئے مناسب پلان بھی بنالیا گیا ہے۔اجلاس میں کمرشل علاقوں میں ٹریفک کیلئے متبادل راستوں، پارکنگ کیلئے جگہ کے حصول اور حد سے زیادہ کمرشل علاقوں میں مزید یونٹ کو روکنے بارے بھی فیصلے کئے گئے۔

اس موقع پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ارشد گوپانگ، اسسٹنٹ کمشنر ز مسعود احمد بخاری، مبشرالرحمن، عبدالرئوف، شیخ محسن نثار، ایم ڈی واسا رائو قاسم ، رائو شفیق الرحمن،یاسر علی، رائو ذکاء الرحمن اور دیگر متعلقہ محکموں کے افسران بھی موجود تھے۔

متعلقہ عنوان :