پاکستان کی امیج بلڈنگ ،ْ تعمیر و ترقی اور معاشرے کی فلاح و بہبود کے لئے سوشل میڈیا کے استعمال پر زور

سوشل میڈیا کے استعمال میں معاشرتی اور ملکی مفاد کا خیال رکھنا ہم سب کی قومی ذمہ داری ہے، وائس چانسلر ،ْ اوپن یونیورسٹی،ْ پروفیسر ڈاکٹر شاہد صدیقی

ہفتہ مئی 22:49

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 مئی2018ء) علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی میں منعقدہ سوشل میڈیا کانفرنس کے مقررین نے سوشل میڈیا کے ذریعہ پاکستان کا مثبت تشخص اجاگر کرنے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ سوشل میڈیا کا استعمال کرنے والے ہر پاکستانی کواس پلیٹ فارم کے استعمال میں پاکستان کی تعمیر و ترقی اور معاشرے کی فلاو و بہبود کا خیال رکھنا چاہئیے۔

انہوں نے کہا کہ اس کام کے لئے انہیں اپنی سوچ میں تبدیلی لانے ،ْ لڑائی جھگڑوں میں نہ پڑنے ،ْ گالی گلوچ کو نظر انداز کرنے ،ْ غیر ضروری سوالوں کا جواب نہ دینے ،ْ نیگیٹیوں پیغامات کو اگنور کرنے اور پازیٹیوں پیغامات کو ایک دوسرے کے ساتھ شئیر کرنے کی ضرورت ہے۔مقررین نے اس بات پر زور دی ہے کہ جب تک سوشل میڈیا کا استعمال کرنے والے اپنی سوچ کا انداز نہیں بدلیں گے تب تک ملک نہیں بدلے گا۔

(جاری ہے)

ڈاکٹر شاہد صدیقی نے کہا کہ تعلیم و تربیت کے سبھی سماجی اداروں پر ایک سماجی ادارے نے مختصر عرصے میں سبقت حاصل کرلی ہے اور وہ سماجی ادارہ میڈیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس سبقت کی اصل وجہ میڈیا کا ریجن اور سپیڈ ہے۔۔ڈاکٹر شاہد صدیقی نے کہا کہ اب ہر ایک پیغام مختصر وقت میں زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچتا ہے اور پیغامات کی ترسیل کی رفتار میں سوشل میڈیا سب سے آگے ہے۔

انہوں نے کہا کہ سوشل میڈیا کے استعمال میں معاشرتی اور ملکی مفاد کا خیال رکھنا ہم سب کی قومی ذمہ داری ہے۔نامور کالم نگار ،ْ ڈاکٹر مجاہد منصوری نے کہا کہ سوشل میڈیا عالمی گائوں کی اصطلاع کا ظہور ہے۔انہوں نے کہا کہ اب دنیا واقعی ایک گائوں کی شکل اختیار کرگئی ہے۔مجاہد منصوری نے کہا کہ اوپن یونیورسٹی کے ساتھ میرا رشتہ مضبوط ہوتا جارہا ہے جس کی وجہ یہاں کی علمی ،ْ ادبی و ثقافتی ماحول ہے۔

انہوں نے کہا کہ ادبی محافل کے انعقاد کے لئے موضوعات کے چنائوں میں ڈاکٹر شاہد صدیقی کا ذہن بہت زرخیز ہے۔ مجاہد منصوری نے کہا کہ یونیورسٹی میں اس طرح کے کانفرنسسز ،ْ سیمینارز ،ْ ادبی و ثقافتی تقریبات تسلسل سے منعقد ہورہے ہیں جس میں ہمیں سیکھنے کے لئے بہت کچھ مل جاتا ہے۔ممتاز صحافی طلعت حسین نے اپنے خطاب میں سوشل میڈیا کو استعمال کرنے کی اپنی ذاتی صحافتی تجربات بیان کئے۔

انہوں نے سوشل میڈیا کی اہمیت اور معاشرے پر اس کے اثرات تفصیل سے بیان کئے۔کانفرنس کا اہتمام یونیورسٹی کے شعبہ ماس کمیونکیشن نے سوشل میڈیا کی تنظیم "پازیٹیو پاکستان""کے تعاون سے کیا تھا۔تقریب کے اختتام پر شعبہ ابلاغ عامہ کے چئیرمین ،ْ پروفیسر ڈاکٹر ثاقب ریاض نے تقریب میں شرکت کرنے اور سوشل میڈیا کے بہتر استعمال پر اظہار خیال کرنے پرمقررین کا شکریہ ادا کیا۔