اگلا صفحہ پچھلا صفحہ

"بجلی کا بحران، عوام پریشان" پر مزید کوریج

عالمی بینک کا دباؤ،بجلی کے نرخوں میں6 پیسے فی یونٹ اضافہ:
کراچی (اُردو پوائنٹ تازہ ترین۔05مارچ 2009 ء) عالمی بینک کادباؤ،وفاقی حکومت نے بجلی کے نرخوں میں 6پیسے فی یونٹ اضافہ کردیا۔بجلی کے نرخوں میں یہ اضافہ 25 فروری2009 سے موثر ہوگا۔ بجلی کی قیمتوں میں اس اضافے سے تمام ڈسٹری بیوشن کمپنیوں کے گھریلو، کمرشل اور صنعتی شعبے سے تعلق رکھنے والے صارفین متاثر ہوں گے۔ حکومت کے فیصلے کے مطابق زرعی شعبے اور 50 یونٹ تک بجلی استعمال کرنے والے گھریلو صارفین اس اضافے سے مستثنیٰ ہوں گے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ بجلی کے نرخوں میں یہ اضافہ عالمی بینک کے اصرار پر کیا گیا ہے۔ ذرائع کا یہ بھی کہنا ہے کہ اپریل میں آئی ایم ایف کی جانب سے پاکستان کے اقتصادی جائزے سے پہلے بجلی کے نرخوں میں پھر اضافہ کیا جائے گا جبکہ آئندہ بجٹ سے پہلے بھی بجلی کی قیمتوں میں اضافہ متوقع ہے۔ تجزیہ کاروں کی رائے کے مطابق صنعتی شعبے کی گروتھ پہلے ہی منفی جارہی ہے اور بجلی کے نرخوں میں حالیہ اضافے سے یہ شعبہ شدید متاثر ہوگا۔

05/03/2009 15:54:29 : وقت اشاعت
پچھلی خبر مركزی صفحہ اگلی خبر
تمام خبریں
یہ صفحہ اپنے احباب کو بھیجئیے
محفوظ کیجئے
پرنٹ کیجئے