اگلا صفحہ پچھلا صفحہ

"بجلی کا بحران، عوام پریشان" پر مزید کوریج

پنجاب، بجلی کی گھنٹوں غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری، شہری پریشان:
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین ۔27دسمبر۔2009ء) پنجاب میں بجلی کی گھنٹوں غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے۔ شہروں میں چار سے آٹھ اور دیہات میں بارہ سے سولہ گھنٹے بجلی کی بندش سے کاروبار زندگی معطل ہو کر رہ گیا ہے۔لاہور کے پاور اسٹیشنز کو گیس کی فراہمی معطل ہونے اور ارسا کی جانب سے پانی کی بندش کے بعد بجلی کا مجموعی شارٹ فال میں غیر معمولی اضافہ ہو گیا ہے۔ فیصل آباد ریجن میں اڑھائی سو سے زائد سی این جی اسٹیشنز دو دن کے لئے بند کئے گئے ہیں۔ دوسری جانب ریجن میں بجلی کا شارٹ فال بھی بڑھ کر چار سو ساٹھ میگا واٹ تک پہنچ گیا۔سیالکوٹ اور گوجرانوالہ کے شہری علاقوں میں آٹھ سے دس جبکہ دیہات میں سولہ گھنٹے بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ جاری ہے جس کے باعث درجنوں فیکٹریاں اور کارخانے بند ہو گئے ہیں۔حافظ آباد،شیخوپورہ، سرگودھا، میانوالی،خوشاب،جھنگ،اوکاڑہ،ساہیوال،چیچہ وطنی،پاکپتن،ملتان، مظفر گڑھ،خانیوال، ڈیرہ غازی خان،رحیم یارخان اور راجن پور سمیت تمام چھوٹے بڑے شہروں میں بجلی کی لوڈشیڈنگ جاری ہے۔ صنعتی یونٹس کو بھی چار سے چھ گھنٹے بجلی کی سپلائی بند رکھی جارہی ہے جس سے پیداواری عمل متاثر ہونے کے علاوہ ہزاروں مزدور یومیہ اجرت سے محروم ہو گئے ہیں۔ وزارت بجلی و پانی کی طرف سے اکتیس دسمبر کو لوڈشیڈنگ ختم کرنے کا وعدہ پورا ہونے کے بجائے لوڈ شیڈنگ میں غیر معمولی اضافہ پر مختلف شہروں میں احتجاج کا سلسلہ بھی جاری ہے۔

27/12/2009 12:51:47 : وقت اشاعت
پچھلی خبر مركزی صفحہ اگلی خبر
تمام خبریں
یہ صفحہ اپنے احباب کو بھیجئیے
محفوظ کیجئے
پرنٹ کیجئے