اگلا صفحہ پچھلا صفحہ

"بجلی کا بحران، عوام پریشان" پر مزید کوریج

کے ای ایس سی انتظامیہ کا لائن لاسز میں کمی کے لیے پاور ایکٹ 1910 میں تبدیلی کا مطالبہ:
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔4جولائی ۔2009ء) کراچی الیکٹرک سپلائی کمپنی کے لائن لاسز کی شرح35 فیصد ہے۔انتظامیہ نے لائن لاسز میں کمی کے لیے پاور ایکٹ 1910 میں تبدیلی کا مطالبہ کیا ہے۔کے ای ایس سی کے منیجنگ ڈائریکٹر نوید اسماعیل نے نجی ٹی وی سے بات چیت میں بتایا کہ پرانی ڈسٹری بیوشن لائنوں اور بڑھتی ہوئی آبادی کے سبب لائن لاسز بڑھ رہے ہیں جسے کم کرنے کے لیے ہر ماہ تقریبا 60 ہزار کنکشنز منقطع کئے جا رہے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ70 فیصد بجلی صنعتکار اور بااثر افراد چوری کرتے ہیں۔ بجلی چوری کی حوصلہ شکنی کرنے کیلئے پاور ایکٹ میں ترمیم ضروری ہے۔نوید اسماعیل کا کہنا تھا کہ آئندہ چار سالوں میں کے ای ایس سی ڈسٹری بیوشن سسٹم کی بہتری اور پاور جنریشن کیلئے 36 کروڑ ڈالر کی سرمایہ کاری کرے گی اور درآمدی کوئلے سے چلنے والے پاور پلانٹ لگائے جائیں گے۔ انہوں نے بتایا کہ نیپرا سے باقی ڈسٹری بیوشن کمپنیوں کی طرح کے ای ایس سی کا ٹیرف ایڈجسٹمنٹ بھی ماہانہ بنیاد پر کرنے کی درخواست کی ہے۔

04/07/2009 17:46:49 : وقت اشاعت
پچھلی خبر مركزی صفحہ اگلی خبر
تمام خبریں
یہ صفحہ اپنے احباب کو بھیجئیے
محفوظ کیجئے
پرنٹ کیجئے